مریم نواز کی مسجد اقصی میں عبادت گزاروں پر حملوں کی شدید مذمت

مسجد اقصیٰ میں عبادت کرنے والے بے گناہ فلسطینیوں پر اسرائیلی فورسز کی طرف سے ظلم و ستم تمام بین الاقوامی قوانین اور ضوابط کی صریح خلاف ورزی ہے جس کی جتنی مذمت کی جائے کم ہے۔نائب صدر ن لیگ مریم نواز کا ٹویٹ
اسلام آباد ( اُردو پوائنٹ تازہ ترین اخبار ۔ 8 مئی 2021ء ) مسجد اقصی میں جمعتہ الوداع کے موقع پر نمازیوں کو مسجد میں داخل ہونے سے روکنے کے لیے اسرائیلی فوج نے طاقت کا استعمال کیا جس کے نتیجے میں 200 سے زائد نمازی زخمی ہوگئے۔پاکستان مسلم لیگ ن کی نائب صدر مریم نواز نے مسجد اقصی میں عبادت گزاروں پر حملوں کی شدید مذمت کی ہے۔مریم نواز نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹویٹر پر ٹویٹ کرتے ہوئے کہا کہ مسجد اقصیٰ میں عبادت کرنے والے بے گناہ فلسطینیوں پر اسرائیلی فورسز کی طرف سے ظلم و ستم تمام بین الاقوامی قوانین اور ضوابط کی صریح خلاف ورزی ہے۔
انہوں نے کہا کہ سب سے بڑھ کر یہ انسانیت کی خلاف ورزی ہے اور اس کی سخت الفاظ میں مذمت کرنی چاہئیے۔
پاکستان نے مسجد اقصی میں عبادت گزاروں پر حملوں کی شدید مذمت کرتے ہوئے کہاہے کہ خطے میں دائمی امن کے لیے ہم ایک مرتبہ پھر اقوام متحدہ اور او آئی سی کی قراردادوں کے مطابق دو ریاستی حل کی ضرورت پر زور دیتے ہیں۔
ترجمان ددفتر خارجہ زاہد حفیظ چوہدر ی نے کہاکہ پاکستان اسرائیلی قابض افواج کی جانب سے مسجد اقصی مین نہتے عبادت گزاروں پر حملوں کی شدید مذمت کرتا ہے،ان حملوں میں بہت سے نہتے عبادت گزار زخمی ہو ئے ۔

انہوںنے کہاکہ رمضان المبارک کے مقدس مہینے میں ایسے حملے انسانیت اور انسانی حقوق قوانین کی کھلی خلاف ورزی ہیں،ہم زخمیوں کی جلد صحت یابی کے لیے دعاگو ہیں۔ زاہد حفیظ چوہدری نے کہاکہ ہم فلسطین کی جائز جدوجہد کے لیے اپنی حمایت کہ تجدید کرتے ہیں،ہم عالمی برادری پر فلسطینیوں کی حفاظت کے لیے فوری ایکشن کے لئے دباو ڈالتے ہیں۔ انہوںنے کہاکہ خطے مین دائمی امن کے لیے ہم ایک مرتبہ پھر اقوام متحدہ اور او آئی سی کی قراردادوں کے مطابق دو ریاستی حل کی ضرورت پر زور دیتے ہیں۔ انہوںنے کہاکہ ایسے حل جس میں سرحدیں 1967 سے قبل اور القدس ایک فلسطینی ریاست کا دارلحکومت ہو۔

Sharing is caring!

Categories

Comments are closed.