شہباز شریف کی ضمانت سے عمران خان کا انتقام میں غرق احتساب ، شہزاد اکبر کے بے بنیاد دعوے سب زمین بوس ہوگئے‘ مسلم لیگ (ن)

بے گناہی ہائیکورٹ کے لارجر بنچ سے ثابت ہوئی ہے ،عوام یہ پوچھنے میں حق بجانب ہیں سلیکٹڈ حکمران نے قوم کے تین سال کیوں ضائع کئے‘ رانا ثنا اللہ خان، مریم اورنگزیب اور عظمیٰ بخاری کی میڈیا سے گفتگو
لاہور(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین – این این آئی۔ 22 اپریل2021ء) پاکستان مسلم لیگ (ن) کے رہنمائوں نے پارٹی صدر شہباز شریف کی لاہو رہائیکورٹ سے ضمانت منظور ہونے پر پوری قوم کو مبارکباد دیتے ہوئے کہا ہے کہ ہم آج اللہ تعالی کا شکر ادا کرتے ہیں کہ شہباز شریف اور شریف فیملی کی بے گناہی ہائیکورٹ کے لارجر بنچ سے ثابت ہوئی ہے ،شہباز شریف کو میرٹ پر ضمانت ملی ہے جس سے ان کی بے گناہی ثابت ہوئی ہے ،عمران خان کا انتقام میں غرق احتساب اور شہزاد اکبر کے بے بنیاد دعوے سب کے سب زمین بوس ہوئے ہیں،آج عمران خان کا کرپشن کرپشن کا جھوٹا بیانیہ ایک بار پھر ناکام ہوا ہے ۔
ان خیالات کا اظہار مسلم لیگ (ن) پنجاب کے صدر رانا ثنا اللہ ، مرکزی سیکرٹری اطلاعات مریم اورنگزیب اور پنجاب کی سیکرٹری اطلاعات عظمیٰ بخاری نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کیا ۔
رانا ثنا اللہ خان نے کہا کہ لاہور ہائیکورٹ کے چار ایک کے فیصلے سے شہباز شریف کی بے گناہی ثابت ہوئی ہے ،اب عوام یہ پوچھنے میں حق بجانب ہیںسلیکٹڈ حکمران نے قوم کے تین سال کیوں ضائع کئے،تین سال تک اس ملک میں کوئی ویلفیئر کا کام نہیں ہوا اور صرف انتقام اور بربادی کی گئی ،اس ملک کی معیشت تباہ کی گئی اور گھٹیا انتقام کا کھیل کھیلا گیا۔

ا نہوں نے کہا کہ پاکستان مسلم لیگ (ن)کی جہدوجہد نواز شریف اور شہباز شریف کی قیادت میں آگے بڑھے گی ، کٹھ پتلی سلیکٹڈ ٹولہ دس دنوں میں امن و امان کی صورتحال کو کنٹرول نہیں کر سکا ، اس نے ریاست کی رٹ نہیں چھوڑی ،ان کے دن گنے جاچکے ہیں،اس ملک اور قوم کی خدمت کو دوبارہ وہیں سے شروع کریں گے جہاں سے یہ سلسلہ ٹوٹا تھا۔ انہوں نے کہا کہ ملک کو مشکلات سے نکالنے کا ایک ہی صاف اور شفاف انتخابات ہیں ،کسی غیر سیاسی مداخلت کے بغیر عوام کے ووٹ کو عزت دی جائے ،عوام کی مرضی کے مطابق حکومت بنے ۔
انہوں نے کہا کہ ہم کٹہرے سے ہوکر آئے ہیں اس کٹہرے نے ہماری بے گناہی ثابت کی ہے۔مریم اورنگزیب نے کہا کہ میں آج پوری قوم کو مبارکباد دیتی ہوں،عمران خان کا کرپشن کرپشن کا جھوٹا بیانہ ایک بار پھر ناکام ہوا ہے ۔چار ججز نے میرٹ پر شہباز شریف کو ضمانت دی ہے ،نیب کسی قسم کا کک بیک کسی قسم کی کرپشن ثابت نہیں کرسکا،عدالت نے نیب سے شہباز شریف کی کرپشن کے ثبوت مانگے نیب ایک دھیلے کی کرپشن ثابت نہیں کرسکا،یہ ہے وہ جھوٹا بیانیہ ،شہباز شریف نے پنجاب کے عوام کی خدمت عبادت سمجھ کر کی،عمران خان اور شہزاد اکبر کیلئے کہوں گی کہ شہباز شریف کو دسویں کیس میں ضمانت ملی ہے ،جو کاغذ یہ لہراتے تھے آج ہائیکورٹ نے وہ تمام ڈسبن میں ڈال دیئے ہیں۔
انہوں نے کہا کہ فیصلہ ہمارے لئے تمغہ ہے ،لوگوں کو گمراہ کیا گیا کہ کرپشن ہوئی لیکن ایک دھیلے کی کرپشن ثابت نہیں کر سکے ،عمران خان کو قوم سے معافی مانگنی چاہیے ،اب تحقیقات عمران خان اور شہزاد اکبر سے ہوں گی ،اب تحقیقات خسرو بختیار، جہانگیر ترین سے ہوں گی ،جو جھوٹے الزامات لگاتے تھے اب ان کو جواب دینا پڑیں گے۔عظمی بخاری نے کہا کہ نیب پراسیکیوٹر شہبازشریف کیخلاف ایک دھیلے کی کرپشن بھی ثابت نہیں کرسکے ،نیب پراسیکیوٹر نے تسلیم کیا شہبازشریف کیخلاف نہ کوئی ٹی ٹیز اور نہ وہ مرکزی ملزم ہیں۔
انہوں نے کہا کہ عمران حکومت بضد تھی کہ شہبازشریف کو اس کیس میں مرکزی ملزم ثابت کیا جائے ،آج شہزاد اکبر کی سب جعلی ٹی ٹیز سے ہوا نکل گئی ہے ،انشااللہ اب ٹرائل کورٹ سے بھی شہبازشریف سرخرو ہوں گے ۔ڈھائی سالوں میں نیب نیازی گٹھ جوڑ نے جتنا ظلم اور بربریت کرنا تھی کرلی اب ان لوگوں کے یوم احتساب کا وقت آگیا ہے ،اعلی عدالتوں سے سرخرو ہونا ہمارے لیے میڈل ہے ،جھوٹ بنایا جا سکتا ہے لیکن اس کو ثابت نہیں کیا جاسکتا ،شہزاد اکبر صاحب سچ کبھی چھپ نہیں سکتا،الحمداللہ شہبازشریف تین رکنی بنچ سے متفقہ طور پر بے گناہ ثابت ہوئے ہیں۔

Sharing is caring!

Categories

Comments are closed.