اسلام آباد (نیوز ڈیسک) وزیراعظم عمران خان نے آج قومی اسمبلی اراکین سے اعتماد کا ووٹ حاصل کیا۔

تفصیلات کے مطابق اسپیکر قومی اسمبلی کی زیر صدارت ہونے والے اجلاس میں 178 اراکین اسمبلی نے عمران خان پر اعتماد کا اظہار کیا۔ لیکن دو رہنما ایسے بھی تھے جو اپنے کپتان پر اعتماد کا ووٹ کاسٹ نہ کر سکے۔

پاکستان تحریک انصاف کے رہنما فیصل واوڈا نے سینیٹ انتخابات سے قبل قومی اسمبلی کی رکنیت سے استعفیٰ دے دیا تھا جس کے باعث وہ آج وزیراعظم عمران خان کو اعتماد کا ووٹ نہیں دے سکے اور ایوان کی بجائے مہمانوں کی گیلری میں موجود رہے جبکہ دوسری جانب اسپیکر اسد قیصر بھی اجلاس ک صدارت کی وجہ سے وزیراعظم عمران خان کے لیے اعتماد کا ووٹ نہیں دے سکے۔دو ووٹ نہ ہونے کے باوجود وزیراعظم عمران خان نے قومی اسمبلی اجلاس میں اعتماد کے 178 ووٹ حاصل کیے ۔وزیراعظم عمران خان کو سب سے پہلے ڈاکٹر عامر لیاقت حسین نے اعتماد کا ووٹ دیا۔ وزیراعظم عمران خان کے اعتماد کا ووٹ حاصل کرنے کا قومی اسمبلی میں موجود تمام اراکین نے ڈیسک بجا کر خیر مقدم کیا۔ خیال رہے کہ آج وزیراعظم عمران خان کے لیے اعتماد کے ووٹ کے لیے اسپیکر قومی اسمبلی اسد قیصر کی زیر صدارت قومی اسمبلی کا خصوصی اجلاس ہوا ۔

قومی اسمبلی کے اجلاس کا آغاز تلاوت قران پاک سے کیا گیا۔ بعدازاں نعت رسول مقبول پیش کی گئی اور قومی ترانہ بجایا گیا جس پر تمام اراکین اسمبلی اور قومی اسمبلی میں موجود افراد احترام میں کھڑے ہوئے۔ وزیراعظم عمران خان وقت پر قومی اسمبلی پہنچے۔ جہاں اراکین اسمبلی نے ان کا بھرپور استقبال کیا۔ اس موقع پر مہمان گیلری میں وزیراعلیٰ سندھ مراد علی شاہ کے علاوہ تینوں وزراء اعلیٰ موجود تھے۔ گورنر سندھ اور گورنر پنجاب بھی گیلری میں موجود تھے جبکہ معاون خصوصی فردوس عاشق اعوان بھی مہمان گیلری میں موجود تھے۔

Sharing is caring!

Categories

Comments are closed.